شش جِہت نور سے جگمگانے لگے دہر میں گونجتی ہے اذاں ساتھیو – نظم

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 27اپریل 2010ء میں مکرم مبارک احمد ظفرصاحب کا کلام شائع ہوا ہے جس میں سے انتخاب ہدیۂ قارئین ہے:

شش جِہت نور سے جگمگانے لگے دہر میں گونجتی ہے اذاں ساتھیو
کر چکے ہیں مسخر فضاؤں کو بھی اب غلام مسیحِ زماں ساتھیو
برگزیدہ شجر موسموں سے لڑا بجلیاں بھی گریں آئے طوفان بھی
یہ تو پلتا رہا اور بڑھتا رہا آج یہ ہو چکا ہے جواں ساتھیو
پُر خطر راہ سے مسکراتے ہوئے ہم تو کرب و بلا سے گزرتے رہے
کوئی منزل ہماری بدل نہ سکی آئی جو آفتِ ناگہاں ساتھیو
زادِ راہ لے کے تقویٰ کا چلتے رہو منزلیں دے رہی ہیں صدائیں ہمیں
پیش قدمی کرو یہ زمیں ہی نہیں اب تو کرنے ہیں زیر آسماں ساتھیو

پرنٹ کریں
یہ مضمون شیئر کرنے کے لئے یہ چھوٹا لنک استعمال کریں۔ جزاک اللہ [http://mahmoodmalik.zindgi.uk/E78y4]

اپنا تبصرہ بھیجیں