لیکن ہمیں ان کی بڑی پرواہ ہے – حضرت صاحبزادہ مرزا ناصر احمد صاحبؒ کی دوراندیشی

(تعارف و انتخاب: فرخ سلطان محمود) (مطبوعہ رسالہ انصارالدین ستمبر و اکتوبر2015ء) تعلیم الاسلام کالج ربوہ کے سابق طلباء کی برطانیہ میں‌قائم تنظیم کے ماہنامہ ’’المنار‘‘ مئی 2011ء میں مکرم چوہدری محمد علی صاحب مرحوم کا بیان کردہ یہ واقعہ شامل اشاعت ہے کہ پاکستان بننے کے بعد والٹن لاہور میں یونیورسٹی آفیسرز ٹریننگ کور …مزید پڑھیں

ایک دلچسپ موضوع سخن

(تعارف و انتخاب: فرخ سلطان محمود) (مطبوعہ رسالہ انصارالدین ستمبر و اکتوبر2015ء) تعلیم الاسلام کالج ربوہ کے سابق طلباء کی برطانیہ میں‌قائم تنظیم کے ماہنامہ ’’المنار‘‘ اپریل 2011ء میں یہ دلچسپ واقعہ بھی درج ہے کہ 1944ء میں کالج یونین کے عہدیداران کی خواہش پر پرنسپل حضرت مرزا ناصر احمد صاحبؒ نے یونین کے افتتاحی …مزید پڑھیں

فرشتہ صفت چہرہ سچائی کا مظہر ہوتا ہے

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 15 جون2012ء میں مکرم مولانا عطاء المجیب راشد صاحب کا ایک مختصر مضمون شاملِ اشاعت ہے۔ یہ مضمون 20مارچ 2012ء کی اخبار روزنامہ ’’جنگ‘‘ لندن میں شائع ہونے والی اُس تحقیقی رپورٹ کے حوالہ سے قلمبند کیا گیا ہے جس میں بتایا گیا تھا کہ چہرے کے تأثرات انسان کے اندر کی …مزید پڑھیں

ڈپریشن کے مریض اور نیند کے مسائل

جدید تحقیق کی روشنی میں… مرتّبہ: فرخ سلطان محمود برازیل کے ماہرین نے ڈپریشن کے مریضوں کے سونے اور جاگنے کے اوقات پر تحقیق کے بعد یہ پتہ چلایا ہے کہ وہ پُرسکون نیندسے محروم تھے۔ اس جائزے میں 200 ایسے لوگوں کو منتخب کیا گیا تھا جو پہلے کبھی کسی ذہنی بیماری میں مبتلا …مزید پڑھیں

نیند کے مسائل اور اُن کا حل

جدید تحقیق کی روشنی میں… تحقیق و مرتّب: فرخ سلطان محمود نیند کے حوالے سے یہ بات بھی دلچسپ اور اہم ہے کہ ہم میں سے بعض کو دوسروں کی نسبت نیند کی قدرتی طور پر زیادہ ضرورت ہوتی ہے۔ ذاتی طبائع کے فرق کے علاوہ عمر اور صنف بھی اِس فرق کو نمایاں کرتی …مزید پڑھیں

معاشرہ میں عورت کا کردار

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 17؍جون 1995ء میں مکرمہ ڈاکٹر فہمیدہ منیر صاحبہ کا بہت عمدہ مضمون شائع ہوا ہے۔ آپ بیان کرتی ہیں کہ میری پہلی مخاطب آج کی بہو ہے جو کل کی ساس ہے۔ اگر آج کوئی اچھی بہو نہیں ہے تو کل کبھی بھی اچھی ساس نہیں بن سکتی۔ وہ آج کی بہو …مزید پڑھیں

تربیت اولاد کے نفسیاتی پہلو

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 13؍جون 1995ء میں مکرم پروفیسر میاں محمد افضل صاحب نے ایک مضمون مشہور سوئس ماہرِ نفسیات ژالی پیا ژے کی تحقیق سے متاثر ہوکر تحریر کیا ہے۔ آپ لکھتے ہیں کہ تربیت سے پہلے بچوں کو سمجھنا زیادہ ضروری ہے اور یہ کہ تربیت کو بنیادی طور پر چار ادوار میں تقسیم …مزید پڑھیں