کوئی سمجھے بھی تو سمجھے گا کسی کا غم کیا – نظم

ہفت روزہ ’’بدر‘‘ قادیان 22؍ستمبر 2011ء میں حضرت صاحبزادی ناصرہ بیگم صاحبہ کی وفات پر کہی گئی مکرم فاروق محمود صاحب کی ایک نظم شامل اشاعت ہے۔ اس نظم میں سے انتخاب ملاحظہ فرمائیں: کوئی سمجھے بھی تو سمجھے گا کسی کا غم کیا ڈھارسیں چند ہی لمحوں کی بنیں مرہم کیا شدّتِ غم کی …مزید پڑھیں

تبصرہ کتاب: ’’قلم دا سورج‘‘

تعارف کتاب: مطبوعہ احمدیہ گزٹ کینیڈا اکتوبر 2019ء ’’قلم دا سورج‘‘ (فرخ سلطان محمود) نام کتاب : قلم دا سورج (پنجابی) لکھاری: مبارک احمد ظفرؔ ناشر: رفعت تسنیم ایڈیشن اوّل: 2018ء تعداد: 3000 صفحات: 180 خاکسار کے لیے یہ امر باعثِ مسرّت ہے کہ پنجابی زبان میں شاعری کی ایک کتاب کا تعارف لکھنے کو …مزید پڑھیں

ہم احمدی بچے ہیں کچھ کرکے دکھادیں گے – نظم

واقفینِ نَو کے رسالہ ’’اسماعیل‘‘ لندن اپریل تا جون 2012ء میں مکرم عبدالمنان شادؔ صاحب مرحوم کی درج ذیل معروف نظم (منقول از روزنامہ الفضل ربوہ 25؍دسمبر 1949ء) شامل اشاعت ہے: ہم احمدی بچے ہیں کچھ کرکے دکھادیں گے شیطاں کی حکومت کو دنیا سے مٹادیں گے ہم مشرق و مغرب میں وحدت کی صدا …مزید پڑھیں

عجب طرح کے لوگ ہیں طبیعتیں بدل گئیں – نظم

ماہنامہ ’’خالد‘‘ ربوہ مئی 2011ء میں مکرم اطہر حفیظ فراز صاحب کی ایک غزل شامل اشاعت ہے۔ اس میں سے انتخاب پیش ہے: عجب طرح کے لوگ ہیں طبیعتیں بدل گئیں عنایتوں کے دَور میں ضرورتیں بدل گئیں خیال بھی اسی طرح ، غزل بھی ہے اسی طرح فصاحتیں بدل گئیں ، بلاغتیں بدل گئیں …مزید پڑھیں

ہماری ماؤں بہنوں کے اُجاڑ کر سہاگ تُو – نظم

ماہنامہ ’’انصاراللہ‘‘ ربوہ اکتوبر 2011ء میں مکرم عبدالسلام اسلام صاحب کی سانحہ لاہور کے حوالہ سے ایک نظم بعنوان ’’تنبیہ بحق ظالم‘‘ شامل اشاعت ہے۔ اس نظم میں سے انتخاب پیش ہے: ہماری ماؤں بہنوں کے اُجاڑ کر سہاگ تُو مُسرّتوں کے تال پر نہ گا خوشی کے راگ تُو نگاہِ ’ذُونْتِقَام‘ ہے ہمیشہ تیری …مزید پڑھیں

باب اُلفت ہے کُھلا ، کن کے لیے! انؐ کے لیے – نعتیہ کلام

ماہنامہ ’’انصاراللہ‘‘ ربوہ دسمبر 2011ء میں شامل اشاعت مکرم منور احمد کنڈے صاحب کا نعتیہ کلام ہدیۂ قارئین ہے: باب اُلفت ہے کُھلا ، کن کے لیے! انؐ کے لیے دشت ہے گلشن بنا ، کن کے لیے! انؐ کے لیے شبنمی ماحول میں ہے نیم شب کو آسماں چاند تاروں سے سجا ، کن …مزید پڑھیں

ہم احمدی انصار ہیں – نظم

(مطبوعہ الفضل انٹرنیشنل 25 اکتوبر 2019ء) ماہنامہ ’’انصاراللہ‘‘ ربوہ اکتوبر 2011ء میں مکرم رانا فضل الرحمن نعیم صاحب کی ایک نظم شامل اشاعت ہے۔ اس نظم میں سے انتخاب پیش ہے: ہم احمدی انصار ہیں ہم مخزنِ افکار ہیں ہم معدنِ انوار ہیں ہم صاحبِ کردار ہیں ہم احمدی انصار ہیں ہم دلبر و دلدار …مزید پڑھیں

دعائیں کرو تم ، دعائیں کرو تم – نظم

ماہنامہ ’’مصباح‘‘ ربوہ جون 2011ء میں سانحہ لاہور کے حوالے سے شائع ہونے والی ایک نظم میں سے انتخاب ہدیۂ قارئین ہے: دعائیں کرو تم ، دعائیں کرو تم ہے وقتِ دعا یہ، دعائیں کرو تم پکارو اُسی کو جو مشکل کُشا ہے درِ یار ہی پر صدائیں کرو تم ہے عشقِ محمّد رضائے الٰہی …مزید پڑھیں

تھی رفتار میں بجلیوں کی سی تیزی جب اس نے سنبھالی زمامِ خلافت – نظم

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 17فروری 2012ء (مصلح موعود نمبر) میں مکرمہ امۃالباری ناصر صاحبہ کی ایک نظم شائع ہوئی ہے جس میں سے انتخاب ہدیۂ قارئین ہے: تھی رفتار میں بجلیوں کی سی تیزی جب اس نے سنبھالی زمامِ خلافت تسلسل ہے عہدِ مسیحا کا گویا ہے جاری وساری نظامِ خلافت وہ تھا ایک جُہد ِمسلسل …مزید پڑھیں

خون میں جو نہا کے آئے ہیں – نظم

(مطبوعہ الفضل ڈائجسٹ 11 اکتوبر 2019ء) ماہنامہ ’’مصباح‘‘ ربوہ مارچ 2011ء میں شہدائے لاہور کے حوالے سے شائع ہونے والی ایک نظم میں سے انتخاب ہدیۂ قارئین ہے: خون میں جو نہا کے آئے ہیں کیسا درجہ کما کے آئے ہیں معتبر ہے ہر ایک زخم کہ یہ راہِ مولیٰ میں کھا کے آئے ہیں …مزید پڑھیں

کیسا خوف و ہراس ہے لوگو – نظم

(مطبوعہ الفضل ڈائجسٹ 11 اکتوبر 2019ء) ماہنامہ ’’خالد‘‘ ربوہ جنوری 2011ء میں مکرم بابرعطا صاحب کی ایک غزل شامل اشاعت ہے۔ اس میں سے انتخاب پیش ہے: کیسا خوف و ہراس ہے لوگو شہر کیوں بدحواس ہے لوگو یہ زمیں کب سے پی رہی ہے لہو کیا عجب اس کی پیاس ہے لوگو اک دلِ …مزید پڑھیں

جاں بلب دل کی جستجو نہ گئی – نظم

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 4مئی 2012ء میں مکرم طارق محمود سدھو صاحب کی ایک غزل شامل اشاعت ہے۔ اس غزل میں سے انتخاب پیش ہے: جاں بلب دل کی جستجو نہ گئی تجھ سے ملنے کی آرزو نہ گئی دل میں جو پھول تجھ کو پا کے کھلے عمر بھر اُن سے رنگ و بُو نہ …مزید پڑھیں

امامت کے بغیر ایماں درخشاں ہو نہیں سکتا – نظم

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 19 مارچ 2012ء میں حضرت اقدس مسیح موعود علیہ الصلوٰۃ والسلام کے ارشادات کی روشنی میں کہی گئی مکرم عبدالسلام اختر صاحب کی ایک نظم بعنوان ’’اجتہاد اور ائمہ فقہ‘‘ شامل اشاعت ہے۔ اس نظم میں سے انتخاب پیش ہے: امامت کے بغیر ایماں درخشاں ہو نہیں سکتا چراغِ ملّتِ وحدت فروزاں …مزید پڑھیں

اِک نگر جب قاضیاں سے قادیاں ہونے لگا – نظم

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 19 مارچ 2012ء میں مکرم مظفر منصور صاحب کی ایک نظم شامل اشاعت ہے۔ اس نظم میں سے انتخاب پیش ہے: اِک نگر جب قاضیاں سے قادیاں ہونے لگا تب ظہورِ مہدیٔ آخر زماں ہونے لگا پھر زمیں پر رحمتوں کی بارشیں ہونے لگیں آسماں پھر سے زمیں پر مہرباں ہونے لگا …مزید پڑھیں

سزاوار حمد و ثنا ایک ہے – حمدیہ کلام

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 30مئی 2012ء میں جناب ابن آدم کا حمدیہ کلام شامل اشاعت ہے۔ اس نظم میں سے انتخاب ہدیۂ قارئین ہے: سزاوار حمد و ثنا ایک ہے ہے صد شکر اپنا خدا ایک ہے جو اِک سے زیادہ ہوں مشکل کُشا غموں سے نہ بندہ ہو عہدہ برآ حقیقت میں مشکل کُشا ایک …مزید پڑھیں

عدو جب جَور کے تیروں کو مومن پر چلاتا ہے – نظم

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 7جون 2012ء میں مکرم خواجہ عبدالمومن صاحب کی ایک نظم شامل اشاعت ہے۔ اس نظم میں سے انتخاب پیش ہے: عدو جب جَور کے تیروں کو مومن پر چلاتا ہے خدا پھر اپنے بندوں کے لئے غیرت دکھاتا ہے عدو کے سارے منصوبے خدا ناکام کرتا ہے وہ ظالم کو پکڑ کر …مزید پڑھیں

کون ہے نفرتوں میں محبت کدہ – نعتیہ کلام

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 31مئی 2012ء میں مکرمہ ا۔ق۔خانم صاحبہ کا نعتیہ کلام شامل اشاعت ہے۔ اس نظم میں سے انتخاب ہدیۂ قارئین ہے: کون ہے نفرتوں میں محبت کدہ مصطفی ۔ مصطفی ۔ مصطفی ۔ مصطفی ؐ روشنی کے سفر میں ستارہ نبی بحرِ ظلمات میں وہ کنارا نبی اپنے مولیٰ کا سب سے وہ …مزید پڑھیں

کوئی کاریگری کر دے – نظم

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 6جون 2012ء میں مکرم مبارک احمد ظفر صاحب کی ایک غزل شائع ہوئی ہے۔ اس غزل میں سے انتخاب پیش ہے: کوئی کاریگری کر دے کل کا ہونا ابھی کردے تُو جو چاہے تو اے قادر! کھوٹی قسمت کھری کر دے ہاتھ اوپر کا ہو میرا ایسا مجھ کو سخی کردے بے …مزید پڑھیں

اس ارمغانِ زیست کا ارماں تمہی تو ہو – نظم

روزنامہ الفضل ربوہ 24مئی 2012ء میں مکرم عبدالصمد قریشی صاحب کی ایک خوبصورت نظم شامل اشاعت ہے۔ اس نظم میں سے انتخاب پیش ہے: اس ارمغانِ زیست کا ارماں تمہی تو ہو اہل وفا کے چَین کا ساماں تمہی تو ہو آقا! سبھی کے درد کا درماں تمہی تو ہو تم ہو ہمارے دلبر و …مزید پڑھیں

چمن کے پتے پتے پر لکھا نامِ خلافت ہے – نظم

روزنامہ الفضل ربوہ 24مئی 2012ء میں شامل اشاعت مکرمہ فریحہ ظہیر صاحبہ کے کلام میں سے انتخاب پیش ہے: چمن کے پتے پتے پر لکھا نامِ خلافت ہے فلک سے بھی کہیں اونچا یہ اکرامِ خلافت ہے فضا جس سے لرز اٹھے پہاڑوں کے جگر پانی زمیں گردش سے تھم جائے وہ الہامِ خلافت ہے …مزید پڑھیں

زمیں پہ خدا کی ہے رحمت خلافت – نظم

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 12 مئی 2012ء میں خلافت جوبلی کے حوالہ سے کہی گئی مکرم محمد اسلم صابر صاحب کی ایک نظم شامل اشاعت ہے۔ اس نظم میں سے انتخاب پیش ہے: زمیں پہ خدا کی ہے رحمت خلافت تحفّظِ دیں کی ضمانت خلافت کرو دل سے اے مومنو! شکرِ ایزد امیں تم ۔ خدا …مزید پڑھیں

متّقی ہونے کا سب سامان ہے رمضان میں – نظم

جماعت احمدیہ امریکہ کے ماہنامہ ’’النور‘‘ جولائی 2012ء میں رمضان المبارک کے حوالہ سے کہی گئی مکرمہ ارشاد عرشی ملک صاحبہ کی ایک نظم شامل اشاعت ہے۔ اس نظم میں سے انتخاب پیش ہے: متّقی ہونے کا سب سامان ہے رمضان میں یہ خدا کا خاص اِک احسان ہے رمضان میں کاروبارِ جنسِ عصیاں بند …مزید پڑھیں

خوشا نصیب کہ تم اس جہاں میں آ بیٹھے – نظم

جماعت احمدیہ امریکہ کے ماہنامہ ’’النور‘‘ جولائی 2012ء میں مکرم عطاء المجیب راشد صاحب کی ایک نظم ’’معتکفین کے نام‘‘ شائع ہوئی ہے۔ اس نظم میں سے انتخاب پیش ہے: خوشا نصیب کہ تم اس جہاں میں آ بیٹھے ملیکِ کُل کے مکاں کو مکاں بنا بیٹھے پڑے گی کیسے نہ تم پہ نگاہِ بندہ …مزید پڑھیں

ظاہر رضائے یار کے عنواں ہوئے تو ہیں – نظم

جماعت احمدیہ امریکہ کے ماہنامہ ’’النور‘‘ جولائی 2012ء (رمضان المبارک نمبر) میں مکرم عبدالشکور صاحب کی ایک نظم شائع ہوئی ہے جس میں سے انتخاب پیش ہے: ظاہر رضائے یار کے عنواں ہوئے تو ہیں پورے تمہاری دید کے ارماں ہوئے تو ہیں ہم نے بھی اپنے صبر کا دامن بہم رکھا فرقت میں تیری …مزید پڑھیں

مسافر بھول نہ جانا سفر دشوار ہوتے ہیں – نظم

روزنامہ الفضل ربوہ 28 اپریل2012ء میں مکرم مبارک صدیقی صاحب کی ایک خوبصورت نظم شائع ہوئی ہے۔ اس نظم میں سے انتخاب ہدیہ قارئین ہے: مسافر بھول نہ جانا سفر دشوار ہوتے ہیں گلابوں کی طرف رستے بڑے پُر خار ہوتے ہیں ہزاروں سانحے بیٹھے پسِ دیوار ہوتے ہیں مسافر بھول نہ جانا دعا زادِ …مزید پڑھیں