حضرت کنفیوشس علیہ السلام کی ’’کتاب الحوار‘‘

کنفیوشس ازم کے بانی حضرت کنفیوشس علیہ السلام کا چینی نام چھیو (Qiu) تھا۔ آپؑ چین کے قدیمی ملک لوکوؤ (Luguo) کے رہنے والے تھے۔ آپؑ کا زمانہ 551 تا 479 قبل مسیح ہے۔ آپؑ کے والد بچپن میں ہی فوت ہوگئے تھے اور آپؑ کی عمر کا بیشتر حصہ غربت میں گزرا لیکن آپؑ …مزید پڑھیں

یہ مضمون شیئر کرنے کے لئے یہ چھوٹا لنک استعمال کریں۔ جزاک اللہ [http://mahmoodmalik.zindgi.uk/FiqdT]

بنی اسرائیل میں لوہے اور تانبے کا دور

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 8؍جولائی 1998ء میں مکرم ڈاکٹر مرزا سلطان احمد صاحب اپنے ایک تحقیقی مضمون میں لکھتے ہیں کہ لوہے اور تانبے کا استعمال انسانی تاریخ میں اتنی اہمیت رکھتا ہے کہ اُس پر بِنا رکھتے ہوئے تاریخ کو مختلف ادوار میں تقسیم کیا گیا ہے- قرآن کریم کے مطابق حضرت داؤد کے لئے …مزید پڑھیں

یہ مضمون شیئر کرنے کے لئے یہ چھوٹا لنک استعمال کریں۔ جزاک اللہ [http://mahmoodmalik.zindgi.uk/92cMx]

نینواہ (NINVEH)

مشہور ماہر آثار قدیمہ ہنری لیئرڈ نے 1839ء اور 1840ء کے سالوں میں موصل (عراق) کے گرد و نواح میں قدیم آشوری (Assyrian) تہذیب کے کھنڈرات پر کام کیا تھا۔ آپ نے دو سالوں میں اتنے وسیع پیمانے پر نئی دریافتیں کیں کہ گویا یہ تباہ شدہ بستیاں دوبارہ پلٹ آئی ہوں۔ نینواہ کے بارے …مزید پڑھیں

یہ مضمون شیئر کرنے کے لئے یہ چھوٹا لنک استعمال کریں۔ جزاک اللہ [http://mahmoodmalik.zindgi.uk/7sEGg]

اُور (UR)

بصرہ سے 120 میل شمال میں طل المقیر نامی سرخی مائل رنگ کا ایک بڑا ٹیلا تھا جس کے اطراف میں کچھ زینے بنے ہوئے تھے اور علاقہ کے بدو طوفانی موسم میں ٹیلے کی اوٹ میں پناہ لیا کرتے تھے۔ 1854ء میں بصرہ میں برٹش قونصل کے ایک غیر تجربہ کار افسر G.E.Taylorنے برٹش …مزید پڑھیں

یہ مضمون شیئر کرنے کے لئے یہ چھوٹا لنک استعمال کریں۔ جزاک اللہ [http://mahmoodmalik.zindgi.uk/miEAD]

تعارف کتاب : ’’مضامین شاکر‘‘ حصہ اوّل

تعارف کتاب از فرخ سلطان محمود (مطبوعہ انصارالدین مارچ اپریل 2012ء) (مطبوعہ الفضل ڈائجسٹ 28 جولائی 2017ء) ’’مضامین شاکر‘‘ آپ کی نظر سے بھی یقیناً بعض ایسی کئی کتب گزری ہوں گی جن کی ورق گردانی شروع کی جائے تو دلچسپ مضامین اپنی گرفت سے نکلنے ہی نہیں دیتے اور ایسے میں وقت کے گزرنے …مزید پڑھیں

یہ مضمون شیئر کرنے کے لئے یہ چھوٹا لنک استعمال کریں۔ جزاک اللہ [http://mahmoodmalik.zindgi.uk/PzMo9]

حاصل مطالعہ (مسیحؑ بلادِشرقیہ میں + بنگال کے متعلق ایک پیشگوئی)

حاصل مطالعہ فرخ سلطان محمود (مطبوعہ رسالہ انصارالدین مئی جون 2014ء) آج کے کالم میں ’’مضامینِ شاکر‘‘ سے ایک تحریر بھی ہدیۂ قارئین ہے: مسیحؑ بلادِشرقیہ میں جب حضرت مسیح موعودعلیہ السلام نے خداتعالیٰ سے خبر پاکر حضرت مسیح ناصری علیہ السلام کی وفات کی خبردی تو پرانی ڈگر کے لوگوں نے طوفانِ مخالفت اُٹھایا …مزید پڑھیں

یہ مضمون شیئر کرنے کے لئے یہ چھوٹا لنک استعمال کریں۔ جزاک اللہ [http://mahmoodmalik.zindgi.uk/IJT1I]

کرمِ خاکی ہوں میرے پیارے

کرمِ خاکی ہوں میرے پیارے نہ آدم زاد ہوں ہوں بشر کی جائے نفرت اور انسانوں کی عار حضرت اقدس مسیح موعود علیہ السلام کے اس شعر پر اعتراض کے ردّ میں محترم حسن محمد خان عارف صاحب مدیراعلی احمدیہ گزٹ کینیڈا نے زبور باب 22 آیت 6 کا حوالہ ماہنامہ ’’احمدیہ گزٹ‘‘ کینیڈا میں …مزید پڑھیں

یہ مضمون شیئر کرنے کے لئے یہ چھوٹا لنک استعمال کریں۔ جزاک اللہ [http://mahmoodmalik.zindgi.uk/aqnCx]

حضرت ہود علیہ السلام

’’قوم عاد‘‘ حضرت نوح علیہ السلام کے پوتے ارم بن سام کی نسل سے تھی اور بڑی شان وشوکت والی قوم تھی جو یمن اورعراق سے لے کر خلیج فارس تک پھیلی ہوئی تھی۔ یہ قوم بت پرست تھی اور بت تراشی اور فن تعمیر میں کمال رکھتی تھی۔ علم ہندسہ، علم کیمیا اور ہیئت …مزید پڑھیں

یہ مضمون شیئر کرنے کے لئے یہ چھوٹا لنک استعمال کریں۔ جزاک اللہ [http://mahmoodmalik.zindgi.uk/mwZJ9]

حضرت ادریس علیہ السلام

حضرت ادریس علیہ السلام کا نام بائبل میں حنوکؔ آیا ہے جس کے عبرانی زبان میں معانی سکھانا کے ہیں۔ ادریس کا مطلب بھی پڑھنے یا پڑھانے والے کے ہیں۔ آپؑ حضرت آدم علیہ السلام سے ساتویں پشت سے تھے اور حضرت نوح علیہ السلام کے پردادا (بعض روایات میں دادا) تھے۔ معراج کی رات …مزید پڑھیں

یہ مضمون شیئر کرنے کے لئے یہ چھوٹا لنک استعمال کریں۔ جزاک اللہ [http://mahmoodmalik.zindgi.uk/t3jzQ]

حضرت نوح علیہ السلام

حضرت نوح علیہ السلام اپنے جد امجد حضرت آدم علیہ السلام کی نویں پشت میں سے تھے۔ آپؑ کے والد کا نام ’’لمک‘‘ تھا اور سام، حام، یافث اور کنعان آپؑ کے چار بیٹے تھے جو دجلہ، نینوہ اور فرات کے درمیان ایک وادی میں آباد تھے۔ حضرت نوح علیہ السلام جدید تہذیب کے پہلے …مزید پڑھیں

یہ مضمون شیئر کرنے کے لئے یہ چھوٹا لنک استعمال کریں۔ جزاک اللہ [http://mahmoodmalik.zindgi.uk/ivrW9]

حضرت صالح علیہ السلام

اب سے قریباً ساڑھے چار ہزار سال پہلے مدینہ منورہ اور تبوک کے درمیان حجر نامی ایک شہرآباد تھا جو قوم ثمود کا مرکزی شہر تھا۔ یہ قوم بہت خوشحال اور ترقی یافتہ تھی اور اس کی معیشت کا زیادہ تر انحصار زراعت پر تھا۔ پتھر کا کام بھی یہ عمدہ کرتے تھے اور پہاڑوں …مزید پڑھیں

یہ مضمون شیئر کرنے کے لئے یہ چھوٹا لنک استعمال کریں۔ جزاک اللہ [http://mahmoodmalik.zindgi.uk/C1OSj]

حضرت ایو ب علیہ السلام

حضرت ایوب علیہ السلام قریباً ساڑھے تین ہزار سال پہلے بحیرہ مردار (فلسطین) اور جزیرہ عرب کے درمیان ادوم یا ادومنہ نامی بستی میں مبعوث ہوئے۔ آپؑ مالدار، صاحب عزت اور تندرست آدمی تھے اور اعلیٰ اخلاق اور ہمدردانہ طبیعت کے مالک تھے۔ خدا تعالیٰ نے آپؑ کو ایسی آزمائش میں ڈالا کہ مذکورہ دنیاوی …مزید پڑھیں

یہ مضمون شیئر کرنے کے لئے یہ چھوٹا لنک استعمال کریں۔ جزاک اللہ [http://mahmoodmalik.zindgi.uk/GXbtA]

حضرت لوط علیہ السلام

ماہنامہ ’’تشحیذ الاذہان‘‘ اپریل 1995ء میں ’’سدوم کی تباہی‘‘ کے عنوان سے ایک مضمون شامل اشاعت ہے۔ ’’سدوم‘‘ بحیرہ مردار کے ساحل پر فلسطین میں واقع تھا جہاں حضرت لوط علیہ السلام کو اللہ تعالیٰ نے نبی بنا کر بھیجا۔ آپؑ کے والد کا نام ہاران تھا۔ حضرت لوط علیہ السلام عراق سے ہجرت کرکے …مزید پڑھیں

یہ مضمون شیئر کرنے کے لئے یہ چھوٹا لنک استعمال کریں۔ جزاک اللہ [http://mahmoodmalik.zindgi.uk/MZdvC]

حضرت ادریس علیہ السلام

بائبل میں حضرت ادریس علیہ السلام کو ’’حنوک‘‘ کے نام سے پکارا جاتا ہے۔ آپ کا تعلق عراق کے شہر بابل سے تھاجہاں سے ہجرت کرکے آپؑ مصر میں آکر آباد ہوئے تھے۔ آپؑ حضرت نوح علیہ السلام کے آباء میں سے تھے۔ قرآن کریم نے صبر اور سچائی آپؑ کی خاص صفات بیان کی …مزید پڑھیں

یہ مضمون شیئر کرنے کے لئے یہ چھوٹا لنک استعمال کریں۔ جزاک اللہ [http://mahmoodmalik.zindgi.uk/L6vns]