حضرت قاضی عبدالرحیم بھٹی صاحبؓ

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 23 جون 2011ء میں حضرت قاضی عبدالرحیم بھٹی صاحبؓ کا مختصر ذکرخیر شامل اشاعت ہے۔ آپؓ 23 جون 1881ء کو حضرت قاضی ضیاء الدین صاحبؓ آف قاضی کوٹ ضلع گوجرانوالہ کے ہاں پیدا ہوئے۔ دونوں باپ بیٹا 313 اصحاب میں شامل تھے۔ حضرت قاضی عبدالرحیم بھٹی صاحبؓ کا نام ضمیمہ انجام آتھم …مزید پڑھیں

حضرت منشی مولا بخش صاحبؓ

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 8 دسمبر 2011ء میں مکرم نصراللہ خاں ناصر صاحب کے قلم سے حضرت منشی مولا بخش صاحبؓ کا تفصیلی ذکرخیر شامل اشاعت ہے۔ حضرت منشی مولا بخش صاحبؓ آدم پور لدھیانہ کے رہنے والے تھے اور حضرت شیخ یعقوب علی عرفانی صاحبؓ کے چچا تھے۔ حضرت مسیح موعودؑ کے ساتھ آپ کے …مزید پڑھیں

درویش صحابہ کرام:حضرت میاں محمدالدین صاحب ؓ

ہفت روزہ ’’بدر‘‘ قادیان (درویش نمبر 2011ء) میں مکرم تنویر احمد ناصر صاحب کے قلم سے اُن 26 صحابہ کرام کا مختصر ذکرخیر شامل اشاعت ہے جنہیں قادیان میں بطور درویش خدمت کی سعادت عطا ہوئی۔ حضرت میاں محمدالدین صاحب ؓ حضرت مسیح موعودؑ کے 313 اصحاب میں شامل تھے۔ 1872ء میں پیدا ہوئے اور …مزید پڑھیں

درویش صحابہ کرام:حضرت بھائی عبدالرحیم صاحبؓ

ہفت روزہ ’’بدر‘‘ قادیان (درویش نمبر 2011ء) میں مکرم تنویر احمد ناصر صاحب کے قلم سے اُن 26 صحابہ کرام کا مختصر ذکرخیر شامل اشاعت ہے جنہیں قادیان میں بطور درویش خدمت کی سعادت عطا ہوئی۔ حضرت بھائی عبدالرحیم صاحبؓ (سابق جگت سنگھ) ولد سردار چندر سنگھ ڈھلوں (آف سرسنگھ ضلع لاہور ) کا ذکرخیر …مزید پڑھیں

درویش صحابہ کرام:حضرت بھائی عبد الرحمن صاحبؓ قادیانی

ہفت روزہ ’’بدر‘‘ قادیان (درویش نمبر 2011ء) میں مکرم تنویر احمد ناصر صاحب کے قلم سے اُن 26 صحابہ کرام کا مختصر ذکرخیر شامل اشاعت ہے جنہیں قادیان میں بطور درویش خدمت کی سعادت عطا ہوئی۔ حضرت بھائی عبدالرحمن صاحبؓ ولد مہتہ گوراندتہ مل صاحب آف گنجروڑ دتاں تحصیل شکرگڑھ کو 1895ء میں حضرت مسیح …مزید پڑھیں

حضرت میاں محمد دین صاحب پٹواریؓ (بلانی کھاریاں)

روزنامہ ’’الفضل‘‘ یکم نومبر 2011ء میں حضرت میاں محمد دین صاحبؓ پٹواری (بلانی کھاریاں ۔ یکے از 313) کا ذکرخیر شائع ہوا ہے۔ حضرت میاں محمد دین صاحبؓ 1873ء میں مکرم میاں نورالدین صاحب کے ہاں موضع حقیقہ پنڈی کھاریاں ضلع گجرات میں پیدا ہوئے۔ آپ کے آباء و اجداد شاہ پور کے علاقہ میں …مزید پڑھیں

حضرت حافظ احمدالدین صاحبؓ

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 24ستمبر 2011ء میں حضرت حافظ احمدالدین صاحبؓ کا مختصر ذکرخیر کیا گیا ہے۔ آپ کے والد حافظ فضل الدین صاحب چک سکندر ضلع گجرات کے رہنے والے تھے۔ آپ نے 24ستمبر 1892ء کو بیعت کی توفیق پائی۔ رجسٹر بیعت اولیٰ میں آپ کی بیعت کا اندراج 355نمبر پر موجود ہے جہاں آپ …مزید پڑھیں

حضرت حافظ محمد قاری صاحب جہلمیؓ

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 10اکتوبر 2011ء میں حضرت حافظ محمد قاری صاحبؓ (یکے از 313 ) ولد نور حسین صاحب راجپوت کا مختصر ذکرخیر شامل اشاعت ہے۔ آپ حضرت مولوی برہان الدین صاحب جہلمیؓ کے شاگرد تھے۔ گو کہ حضرت مولوی صاحبؓ نے حضرت مسیح موعودؑ کی زیارت پہلے کی تھی لیکن پہلے بیعت کرنے کا …مزید پڑھیں

حضرت مرزا غلام رسول صاحبؓ

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 5اکتوبر 2011ء میں حضرت مرزا غلام رسول صاحبؓ ریڈر جوڈیشل کمشنر پشاور (یکے از 313 ) کا مختصر تعارف شامل اشاعت ہے۔ حضرت مرزا غلام رسول صاحبؓ کا اصل وطن موضع پنڈی لالہ ضلع گجرات تھا۔ بی اے تک تعلیم اسلامیہ کالج لاہور میں پائی۔ آپ بیعت سے قبل زمانۂ طالبعلمی کے …مزید پڑھیں

حضرت مولوی صفدر حسین صاحبؓ

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 27؍اگست 2011ء میں حضرت مولوی صفدر حسین صاحبؓ (یکے از صحابہ 313) کا مختصر ذکرخیر شامل اشاعت ہے۔ حضرت مولوی صفدر حسین صاحبؓ نے 17؍ اگست 1892ء کو بیعت کی۔ رجسٹر بیعت اولیٰ میں آپؓ کا نام 349 نمبر پر ’مولوی منشی صفدر علی صاحب ولد محی الدین صاحب ساکن … ضلع …مزید پڑھیں

حضرت مولوی رحیم اللہ صاحب ؓ

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 30؍اگست 2011ء میں حضرت مولوی رحیم اللہ صاحبؓ (یکے از 313 صحابہؓ) کا ذکرخیر شامل اشاعت ہے۔ آپؓ کے والد محترم حبیب اللہ صاحب کا تعلق راجپوت قوم سے تھا۔ آپؓ 1813ء میں پیدا ہوئے تھے۔ آپؓ مسجد کوچہ سیٹھاں لاہور کے امام الصلوٰۃ تھے۔ یہ مسجد حضرت میاں چراخ دین صاحب …مزید پڑھیں

حضرت مولوی سید محمد رضوی صاحبؓ

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 3اگست 2011ء میں حضرت مولوی سید محمد رضوی صاحبؓ (یکے از 313) کا مختصر سوانحی خاکہ شامل اشاعت ہے۔ حضرت مولوی سید محمد رضوی کے والد صاحب کا نام نواب امیر ابو طالب تھا۔ آپ 1862ء یا 1864ء میں بمقام ایلور علاقہ مدراس میں پیدا ہوئے۔ آپ بڑے وجیہ اور خوبصورت تھے۔ …مزید پڑھیں

1910ء میں وفات پانے والے بعض صحابہؓ

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 18 دسمبر 2010ء میں مکرم غلام مصباح بلوچ صاحب کا مضمون شائع ہوا ہے جس میں حضرت مسیح موعود علیہ السلام کے اُن صحابہؓ میں سے چند ایک کا تذکرہ کیا گیا ہے جن کی وفات 1910ء میں ہوئی۔ حضرت حکیم فضل دین صاحب بھیروی ؓ یکے از 313 صحابہ حضرت حاجی …مزید پڑھیں

حضرت منشی عبدالرحمن صاحبؓ اور اُن کی نسل پر حضرت مسیح موعودؑ اور خلفاء کی شفقتیں

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 23 ستمبر 2010ء میں مکرم ضیاء الدین حمید صاحب کے قلم سے ایک مضمون شامل اشاعت ہے جس میں حضرت منشی عبدالرحمن صاحب ؓ کپورتھلوی اور آپ کی نسل پر حضرت مسیح موعودؑ اور خلفاء احمدیت کی شفقتوں کا ذکر کیا گیا ہے۔ حضرت منشی عبدالرحمن صاحبؓ آف کپورتھلہ کا تعلق سراوہ …مزید پڑھیں

حضرت مولوی غلام امام صاحب عزیزالواعظین

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 7 جون 2010ء میں حضرت مولوی غلام امام صاحب عزیزالواعظین (صحابی حضرت مسیح موعود علیہ السلام یکے از 313) کے مختصر حالاتِ زندگی شامل اشاعت ہیں جو کتاب ’’اصحاب صدق و صفا 313 ‘‘ سے ماخوذ ہیں۔ حضرت مولوی غلام امام صاحب اصل میں شاہجہانپور کے رہنے والے تھے لیکن اپنی ملازمت …مزید پڑھیں

حضرت میاں نور محمد صاحب ۔غوث گڑھ

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 4؍مارچ 2010ء میں حضرت میاں نور محمد صاحبؓ آف غوث گڑھ (یکے از 313 صحابہ) کا مختصر ذکر کیا گیا ہے۔ حضرت میاں نور محمد صاحبؓ آف غوث گڑھ (ریاست پٹیالہ) کے زمیندار اور نمبردار تھے۔ والد کا نام ’’رکھا‘‘ تھا حضرت منشی عبداللہ سنوری صاحبؓ کے ذریعہ احمدیت کا تعارف ہوا۔ …مزید پڑھیں

حضرت عبدالرحمن صاحبؓ پٹواری

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 3؍مارچ 2010ء میں حضرت عبدالرحمن صاحبؓ پٹواری (یکے از 313 صحابہ) کا مختصر ذکر کیا گیا ہے۔ حضرت عبدالرحمن صاحبؓ ولد دیدار بخش صاحب ساکن سنور علاقہ پٹیالہ سے تھے۔ آپ زمینداری کرنے کے علاوہ بطور پٹواری بھی ملازم تھے۔ رجسٹر بیعت میں آپ کی بیعت 176ویں نمبر پر درج ہے۔ آپؓ …مزید پڑھیں

حضرت مولوی حکیم نور محمد صاحبؓ موکل

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 13مئی 2009ء میں حضرت مولوی حکیم نور محمد صاحبؓ موکل (یکے از 313) کا مختصر ذکر شامل اشاعت ہے۔ حضرت نور محمد صاحب (مالک نوری شفاخانہ موکل ضلع لاہور۔ حال ضلع قصور) ایک مخلص اور فدائی وجود تھے۔ آپ کی بیعت ابتدائی زمانہ کی ہے۔ اخبار ’’البدر‘‘ کے اجراء پر آپؓ نے …مزید پڑھیں

حضرت مولوی عبدالمغنی صاحبؓ

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 10؍جون 2009ء میں حضرت مولوی عبدالمغنی صاحب ؓ (یکے از 313) کا مختصر ذکرخیر شامل اشاعت ہے۔ حضرت مولوی برہان الدین جہلمی صاحبؓ سات بھائی تھے۔ ساتوں بڑے پایہ کے عالم تھے اور علیحدہ علیحدہ مساجد کے امام بھی تھے لیکن احمدیت صرف حضرت مولوی برہان الدین صاحبؓ کو نصیب ہوئی۔ حضرت …مزید پڑھیں

حضرت شیخ مسیح اللہ صاحبؓ شاہجہانپوری

ماہنامہ ’’خالد‘‘ اپریل 2009ء میں حضرت شیخ مسیح اللہ صاحبؓ شاہجہانپوری کی سیرت و سوانح سے متعلق ایک مختصر مضمون مکرم غلام مصباح بلوچ صاحب کے قلم سے شامل اشاعت ہے۔ حضرت شیخ مسیح اللہ صاحب شاہجہانپور (اترپردیش) سے تعلق رکھتے تھے۔ اگرچہ آپ کی بیعت کے سال کا علم نہیں لیکن اُس وقت آپ …مزید پڑھیں

حضرت بابو شاہ دین صاحبؓ

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 25؍مئی 2009ء میں حضرت بابو شاہ دین صاحبؓ کا مختصر ذکرخیرشامل اشاعت ہے۔ حضرت بابو شاہ دین صاحبؓ ساہووال ضلع سیالکوٹ کے رہنے والے تھے اور سٹیشن ماسٹر تھے، اس ملازمت کے لیے آپ زیادہ تر ضلع جہلم اور راولپنڈی کے مختلف علاقوں میں متعین رہے۔ جب مردان میں ریلوے کا آغاز …مزید پڑھیں

حضرت سید عبدالہادی صاحبؓ

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 4؍مارچ 2009ء میں حضرت سید عبدالہادی صاحب ؓ (صحابی یکے از 313) کا ذکرخیر شامل اشاعت ہے۔ حضرت سید عبدالہادی صاحبؓ ابن سید شاہنواز صاحب ساکن ماچھی واڑہ کو 4 مارچ 1890ء کو حضرت مسیح موعودؑ کی بیعت کا شرف حاصل ہوا۔ رجسٹر بیعت اولیٰ میں آپ کا نام 177ویں نمبر پر …مزید پڑھیں

حضرت میاں امام الدین صاحب سیکھوانی

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 8؍مئی 2009ء میں حضرت میاں امام الدین صاحبؓ آف سیکھواں ضلع گورداسپور (یکے از صحابہ 313) کا ذکرخیر شامل اشاعت ہے۔ حضرت میاں امام الدین صاحبؓ ابن محترم محمد صدیق صاحب وائیں کشمیری کے دو بھائی (حضرت میاں جمال الدین صاحبؓ اور حضرت میاں خیرالدین صاحبؓ) بھی صحابہ میں شامل تھے۔ تینوں …مزید پڑھیں

حضرت مولوی تاج محمد خان صاحب

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 7؍مئی 2009ء میں حضرت مولوی تاج محمد خان صاحبؓ آف لدھیانہ (یکے از صحابہ 313) کا ذکرخیر مکرم غلام مصباح بلوچ صاحب کے قلم سے شامل اشاعت ہے۔ حضرت مولوی تاج محمد صاحبؓ ولد نجم الدین صاحب اصل میں سیدبانڈی ریاست پونچھ کشمیر کے رہنے والے تھے لیکن بعد میں ساری زندگی …مزید پڑھیں

حضرت حسن دین رہتاسی صاحب رضی اللہ عنہ

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 20 جون 2009ء میں مزاح کے نامور احمدی شاعر حسن رہتاسی کی شاعری اور حالات کے حوالہ سے جناب ابن آدم کا ایک مضمون (مرسلہ:سید رضا احمد صاحب) شامل اشاعت ہے۔ رہتاس کا قدیم نام منڈی تھا۔ یہاں کی آبادی لاکھوں نفوس پر مشتمل تھی جو قلعہ کے باہر تک پھیلی ہوئی …مزید پڑھیں